حاملہ خواتين كو ايك نصيحت

حاملہ خواتين كو ايك نصيحت

حاملہ خواتين كو نصيحت كى جاتى ہے كہ وہ بھار ى چيزوں كے اٹھانے ، زيادہ سخت كام كرنے اور تھكادينے والے امور سے اجتناب كريں _ كيوں كہ ماں كے ليے تھكادينے والے امور بچے كے امن و آرام كو بھى درہم برہم كرديتے ہيں اور اس كے لئے بھى ناراضى كا سامان بنتے ہيں يہانتك كہ ممكن ہے ايسے كاموں كى وجہ سے حمل ساقط ہوجائے _

حمل كے آخرى مہينوں ميں عورت كے ليے سفر ضرررساں ہوتا ہے _ اگر اہم مسئلہ نہ ہو تو بہتر ہے كہ سفر ترك كرديا جائے _ البتہ ہلكے پھلكے افعال اور چھوٹى موٹى فعاليت نہ صرف يہ كہ باعث ضرر نہيں ہے بلكہ ماں اور بچے ہر دو كى صحت و سلامتى كے لئے مفيد ہے _

ڈاكٹر جلالى لكھتے ہيں :

ماں كى زيادہ خستگى خون ميں زہريلے مواد كا موجب بنتى ہے اور چونكہ يہى خون جنين كى غذا بھى بنتاہے لہذا بچے كى نشو و نما پر اثر انداز ہوتا ہے _(1)


1_ روانشناسى كودك ص 222