انبياء كى كاميابي

انبياء كى كاميابي

جلالي: روايات ميں مہدى موعود (عج) كى جو تعريف و توصيف وارد ہوئي ہيں ان كے اعتبار سے تو آپ(ع) تمام انبياء يہاں تك رسول اسلام (ع) سے بھى افضل و اكمل ہيں كيونكہ معاشرہ انسانى كى اصلاح كرنے ، توحيد كى عالمى حكومت كى تاسيس كرنے اور انسانوں كے درميان خدا كے احكام و قوانين كو جارى كرنے عدالت عمومى كے قائم كرنے اور ظلم و ستم كو مٹانے ميں ان ميں سے كوئي بھى كاميباب نہيں ہوا ہے _ اس سلسلہ ميں صرف مہدى موعود ہى كامياب ہوں گے بس_

ہوشيار: اصلاح بشر اور خدا كے قوانين كا مكمل اجراء تمام انبياء كا مقصد تھا ان خدائي نمائندوں ميں سے ہر ايك نے اپنے زمانہ كى فكرى استعداد كے مطابق اس مقصد كے حصول كيلئے كوشش كى اور انسان كو اس مقصد سے قريب كيا _ اگر ان كى فداكارى و كوشش نہ ہوتى تو حكومت توحيد كيلئے ہرگز زمين ہموار نہ ہوتى پس اس عظيم مقصد ميں سارے انبياء شريك ہيں ، مہدى موعود كى كاميابى كو تمام خدا پرستوں اور انبياء كى كاميابى تصور كرنا چاہئے _ آ پ كى كاميابى كوئي فردى كاميابى نہيں ہے بلكہ آپ كى محير العقول طاقت كے ذريعہ حق باطل پر كامياب ہوگا _ دين دارى بے دينى پر چھا جائے گى اور گزشتہ انبياء كے و عدول كو عملى جامہ پہنايا جائے گا اور ان كا مقصد پورا ہوگا _

مہدى موعود كى كاميابى در حقيقت آدم و شيث ، نوح و ابراہيم ، موسى و عيسى اور حضرت محمد (ص) اور تمام انبياء كى كاميابى ہے _ انہوں نے اپنى فداكارى سے راستہ ہموار كيا ہے اور انسان كے مزاج كو كسى حد تك آمادہ كيا ہے _ منصوبہ سازى اور مبارزہ كا آغاز انبياء ہى سے ہواہے اور اپنى نوبت ميں ان ميں سے ہر ايك نے بشر كے دينى افكار كى سطح كو بلند كيا ہے يہاں تك پيغمبر اسلام كى نوبت آئي تو آپ نے اس عالمى انقلاب كا مكمل نقشہ اور پروگرام مرتب كيا اور ائمہ اطہار كى تحويل ميں ديديا _ اس سلسلہ ميں آپ نے اور آپ كے جانشينوں نے بہت كوششيں كى ہيں اور بہت سى مشكليں برداشت كى ہيں _ سالہا سال گزرتے جائيں اور دنيا ميں بہت سے انقلابات رونما ہوجائيں تب جاكر انسان كے مزاج ميں توحيد كى حكومت قبول كرنے كى استعداد و لياقت پيدا ہوگى _ اور اس وقت كفر و بے دينى كا محاذ مہدى موعود كى سپاہ كے ذريعہ فتح ہوگا اور بشريت كى اميد برآئے گى _

اس بناپر مہدى موعود پيغمبر اسلام بلكہ تمام انبياء كے منصوبوں كو عملى جامہ پہنانے والے ہيں اور آپ كى كاميابى سارے آسمانى مذاہب كى كاميابى ہے _ خدا نے زبور ميں حضرت داؤد سے كاميابى عطا كرنے كا وعدہ كيا ہے اور حضرت مہدى كا شان ميں نازل ہونے والى آيتوٹ ميں سے ايك ميں فرماتا ہے _ ہم نے زبور ميں لكھديا ہے كہ ہم اپنے صالح وشائستہ بندوں كو زمين كا وارث بنائيں گے _ (1)


1_ انبياء/205_